تلنگانہ

لڑکیوں کو حفاظت خوداختیاری کی تربیت ضروری۔سابق مجسٹریٹ کا ڈان ہائی اسکول میں خطاب

سابق اسپیشل میٹرو پولیٹن مجسٹریٹ سی سی حیدرآباد باشاہ نواز خاں نے سماج میں عصمت ریزی کے بڑھتے ہوئے واقعات پر تشویش کا اظہار کیا ہے اور خاطیوں کو عبرتناک سزا دینے پر زور دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ لڑکیاں اور خواتین حفاظت خوداختیاری کی تکنیک اور کراٹے جیسے مارشل آرٹس کو سیکھتے ہوئے جنسی حملوں کی صورت میں اپنا بھرپور تحفظ کرسکتی ہیں۔

باشاہ نواز خاں ڈان ہائی اسکول ملک پیٹ میں سیدہ فلک کراٹے اکیڈیمی کے اشتراک سے لڑکیوں اور خواتین کیلئے کراٹے اور حفاظت خوداختیاری کے سمرکیمپ کی اختتامی تقریب اور سرٹیفکیٹس کی تقسیم کے پروگرام سے خطاب کررہے تھے۔ اس مفت سمر کیمپ سے تقریباً100خواتین اور لڑکیوں نے استفادہ کیا۔ جن کا تعلق مختلف تعلیمی اداروں سے تھا۔ سابق اسپیشل میٹرو پولیٹن مجسٹریٹ نے کہا کہ اس طرح کی حفاظت خوداختیاری صلاحیتیں حاصل کرنے سے لڑکیوں اور خواتین کے اعتماد میں اضافہ ہوتا ہے۔ اس موقع پر کیمپ سے استفادہ کرنے والی لڑکیوں اور بین الاقوامی کراٹے چمپین سیدہ فلک اور ٹرینر فریحہ تفہیم نے اپنے فن کا مظاہرہ کیا۔ سابق صدرنشین آندھراپردیش اردو اکیڈیمی سید نورالحق قادری‘ ممتاز امراض جلد ڈاکٹر غلام عباس ودیگر مہمانان نے کیمپ کے انعقاد پر خوشی کا اظہار کیا اور اسے کارآمد بتایا۔

صدرنشین ڈان گروپ آف انسٹی ٹیوشنس فضل الرحمن خرم نے شکریہ ادا کیااور سیدہ فلک سے مجوزہ کامن ویلتھ کھیلوں کے لئے ان سے نیک تمناوں کا اظہار کیا۔سیدہ فلک نے اعلان کیا کہ وہ سمر کیمپ کے بعد بھی حفاظت خوداختیاری اور کراٹے کلاسس مستقل بنیادوں پر منعقد کرنے میں تعاون کریں گی۔ اسکولی طالبہ و کیمپ سے استفادہ کرنے والی ایک لڑکی ماریہ ارم نے شکریہ ادا کیا۔

 

 

متعلقہ خبریں

Back to top button