تلنگانہ

مرجائیں گے لیکن حجاب نہیں چھوڑیں گے

نظام آباد:14/ فروری (ای میل)مرجائیں گے لیکن حجاب نہیں چھوڑیں گے۔ کریسنٹ گرلز جونیئر کالج و اسکول، گولڈن جوبلی جونیئر کالج اور نالج پارک انٹرنیشنل اسکول کی طالبات نے اُردو پریس کلب نظام آباد پر میڈیا کے نمائندوں سے خطاب کرتے ہوئے ان خیالات کا اظہار کیا۔

صبا ء فاطمہ کریسنٹ جونیئرفار گرلز کالج صبا ء انجم کریسنٹ ہائی اسکول،عصمت النساء،حضیفہ افشین،ہاجرہ فاطمہ،نیہا جبین،صدرہ فاطمہ گولڈن جوبلی جونیئر کالج،ثانیہ،عشرت فردوس گولڈ ن جوبلی اسکول اور دیگر طالبات نے اپنے خطابات میں کہا کہ اللہ رب العزت نے قرآن پاک میں مومن عورتوں کو حجاب کرنے کا حکم دیا ہے حجاب کرنے والی خواتین و لڑکیاں اسلام کی شہزادیاں کہلاتی ہے ان باحجاب لڑکیوں نے کہا کہ وہ اسلام کی شہزادیاں ہے اور انہیں حجاب پہنتے ہوئے بے حد خوشی، اطمینان اور روحانی سکون حاصل ہورہاہے۔ کرناٹک کے ایک کالج میں حجاب پر پابندی سے پیدا ہونے والے تنازعہ کی مذمت کرتے ہوئے ان با ہمت طالبات نے کہا کہ دیگر مذاہب کی خواتین اور لڑکیاں ان کے طور طریقہ پر عمل کرتی ہے اسی طرح اسلام کی ماننے والی لڑکیاں بھی حجاب پہنتی ہے جو کوئی بری بات نہیں ہے بلکہ سیاسی فائدہ کیلئے حجاب کو نشانہ بنایا جارہا ہے۔ ان طالبات نے قرآن پاک کی آیات اور دستور ہند کی دفعات کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ دستور ہند میں مختلف مذاہب کے ماننے والوں کومذہبی آزادی دی گئی ہے لیکن صرف دین اسلام کو ماننے والی خواتین و لڑکیوں کو نشانہ بنانے کی مذموم سازش کی جارہی ہے جس کو قطعی برداشت نہیں کیا جائیگا۔ آئینی حق کو حاصل کرنے کیلئے با حجاب خواتین احتجاجی راستہ اختیار کرنے سے بھی گریز نہیں کریں گے۔

تمام طالبات نے کرناٹک کالج کی با ہمت طالبہ مسکان خان کی ستائش اور سراہنا کی۔ طالبات نے اُردو اور انگریزی زبانوں میں خطابات کرتے ہوئے حجاب کو ہر حال میں اختیار کرنے کا اعلان کیا ہے۔ اُردو پریس کلب نظام آباد پر حجاب کے تعلق سے اظہار خیال کا موقع حاصل ہونے پر تمام طالبات نے اُردو پریس کلب کے سرپرست، صدر اور تمام عہدیداروں کا شکریہ ادا کیا۔ اس پریس کانفرنس میں اُردو پریس کلب کے تمام عہدیدار موجود تھے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button