اوٹکور کے مدرسہ تحتانیہ کے احاطہ میں کچرے اور کانٹے دار جھاڑیوں کا انبار طلبا کو مدرسہ جانے کیلٸے ہورہی ہے مشکلات

اوٹکور :(اردو لیکس۔محمد وسیم) اوٹکور مستقر کے مدرسہ تحتانیہ اردو میڈیم میں طلبا کو مدرسہ جانے کے لٸے بہت ہی دشواری پیش آرہی ہے۔تفصیلات کے مطابق مدرسہ تحتانیہ جانے کیلٸے راستے میں خاردار جھاڑیاں،کچرا،تعفن رہنے کی وجہ سے طلبا کو اسکول جانے کیلٸے بہت ہی دشواری محسوس ہورہی ہے۔اس ضمن میں اولیاٸے طلبا اور ایس ایم سی کمیٹی کے ذمہ داران نے ایک دھرنا منظم کرنے کی کوشش میں ہی تھے کہ اوٹکور منڈل ایم ای او وینکٹیا کو اس دھرنا کی اطلاع ملنے پر فورا حرکت میں آتے ہوٸے رکن اسمبلی مکتھل چٹم رام موہن ریڈی اور مقامی سرپنچ سوریہ پرکاش ریڈی کو مدرسہ کی خستہ حالت، خاردھار جھاڑیوں کی صاف و صفاٸی،حالت زار ہونے پر فون پر اطلاع دی۔جس پر رکن اسمبلی اور مقامی سرپنچ نے مدرسہ اور سڑک کی صاف وصفاٸی کروانے کا ایم ای او کو فون پر تیقن دیا بعد ازیں رکن اسمبلی و مقامی سرپنچ نے سمیع اللہ کلوال ٹی آر ایس ماٸناریٹی ٹاٶن ناٸب صدر اوٹکور کو ہدایت دی کہ وہ فورا مدرسہ جا کر اولیاٸے طلبا اور ایس ایم سی کے ذمہ داران کو سمجھا کر اس دھرنا کو ختم کروایا جاٸے۔تاہم اس دھرنا کو ختم کیا گیا۔ اس موقع پر ایس ایم سی کے ذمہ داران میں محمد رفیع پورلہ،محمد اسماعیل وارڈ ممبر،وقار پونس،انور باگو،محمد اسماعیل مسعود،مجاہد،شوکت،ارشد موجود تھے۔