شوہر کے پھانسی لینے کی اطلاع کے بعد بیوی نے دو بچوں کے ساتھ مل کر کرلی خودکشی _ تلنگانہ میں دل دہلانے والا واقعہ

شوہر کے پھانسی لینے کی اطلاع کے بعد بیوی نے دو بچوں کے ساتھ مل کر کرلی خودکشی _ تلنگانہ میں دل دہلانے والا واقعہ

 

حیدرآباد_ تلنگانہ میں ایک ہی خاندان کے چار افراد نے علحیدہ طور پر خودکشی کرلی۔جن میں شوہر اور بیوی دو بچے شامل ہیں یہ دل دہلانے والا واقعہ حیدرآباد اور سنگاریڈی میں پیش آیا۔تفصیلات کے مطابق سنگاریڈی کے گارلاپلی گاوں سے تعلق رکھنے والا سافٹ ویئر انجینئر چندرکانت اپنی بیوی لاونیا دو کمسن بچوں کے ساتھ  حیدرآباد کے بی ایچ ای ایل میں مقیم تھا ۔ ان کے دو بچے پرتھم (8) اور سروجنا (3) ہیں۔

چندرکانت کچھ عرصے سے  رئیل اسٹیٹ کا بھی کاروبار کرتا تھا کاروبار میں نقصان کے بعد وہ کافی پریشان تھا ۔ اور اس کی  مالی مشکلات میں اضافہ ہوگیا ۔ جس کے نتیجے میں میاں بیوی کے درمیان کچھ عرصے سے جھگڑے چل رہے تھے۔ جمعرات کی رات، لاونیا اور چندرکانت کے درمیان کچھ بات پر تھوڑی دیر تک جھگڑا ہوا۔ اس کے ساتھ ہی لاونیا اپنے دو بچوں کو لے کر میکہ چلی گئی۔

چندرکانت نے بیوی اور بچوں کے گھر سے باہر جانے کے بعد گھر میں پھانسی لے کر خودکشی کرلی۔ تاہم لاونیا نے اپنے پڑوسی سے فون پر ربط پیدا کرتے ہوئے شوہر کی خیر خیریت دریافت کی ۔جس پر اس کے پڑوسی نے چندرکانت کو آواز دی لیکن گھر میں سے کوئی آواز نہیں آئی۔پڑوسی مکان کی کھڑکی کھول کر دیکھا تو چندرکانت فیان سے لٹک رہا تھا فوری اس نے لاونیا کو اس کے شوہر کے پھانسی لینے کی اطلاع دی۔

شوہر کی خودکشی کی اطلاع سن کر پریشان لاونیا نے اپنے دو بچوں کو  اندول کے بڑے تالاب میں پھینک دیا اور وہ خود بھی تالاب میں کود کر خودکشی کر لی۔

جمعہ کی صبح ایک مقامی شخص نے اندول کے  بڑے تالاب میں دو نعشیں دیکھی اور اس معاملے کی اطلاع پولیس کو دی۔ پولس تالاب پر پہنچی تو پانی پر تیرتی ماں اور دو بچوں کی نعشیں  نکالیں۔ اس کے بعد پولیس نے ان کے رشتہ داروں کو اطلاع دی ۔۔ تینوں کی نعشوں کو بعد میں پولس نے پوسٹ مارٹم کے لیے جوگی پیٹ اسپتال منتقل کیا۔ پولیس نے مقدمہ درج کر لیا ہے اور واقعہ کی تحقیقات کر رہی ہے۔