بزنس

بڑی خبر _ ڈی ایچ ایف ایل بینک کی جانب سے 34 ہزار کروڑ روپے کی دھوکہ دہی _ بینک اور ڈائریکٹرس کے خلاف سی بی آئی کے دھاوے، مقدمہ درج

نئی دہلی _ 22 جون ( اردولیکس) سی بی آئی نے دیوان ہاؤسنگ فینانس کارپوریشن لمیٹڈ (ڈی ایچ ایف ایل)، اس کے سابق پروموٹر کپل وادھوان اور دیراج وادھوان کے خلاف دھوکہ دہی کا مقدمہ درج کیا ہے۔ یونین بینک کی زیر قیادت کنسورشیم نے  34,615 کروڑ روپے کے غبن کے الزام میں سی بی آئی نے یہ مقدمہ درج کیا ہے۔ بینکوں کی دھوکہ دہی کے معاملے میں سی بی آئی نے اب تک جو مقدمات درج کیے ہیں، ان میں یہ سب سے بڑا دھوکہ دہی کا معاملہ ہے۔ اے بی جی شپ یارڈز کمپنی (22,842 کروڑ روپے) کے ذریعہ اب تک کا سب سے بڑا معاملہ تھا جسے ڈی ایچ ایف ایل نے پیچھے کردیا۔

سی بی آئی حکام نے بتایا کہ انہوں نے ڈی ایچ ایف ایل معاملے میں چہارشنبہ کو ممبئی میں 12 مقامات پر تلاشی لی ۔ مبینہ طور پر تقریباً 50 افسران معائنہ میں شامل تھے۔ حکام نے سودے کے بعد ڈی ایچ ایف ایل، کپل، دیراج وادھوان، ایمریلیس ریئلٹرز کے سدھاکر شیٹی اور چھ دیگر بلڈرز کے خلاف مقدمہ درج کیا ہے۔

یونین بینک نے کہا کہ بینک کنسورشیم نے 2010 اور 2018 کے درمیان 42,871 کروڑ روپے کے قرض اکٹھے کیے تھے ۔ بینک نے 2021 میں سی بی آئی کو ایک خط لکھا جس میں کہا گیا تھا کہ 2019 سے قرض کی ادائیگی روک دی گئی ۔

متعلقہ خبریں

Back to top button