نیشنل

پارلیمنٹ میں زرعی قوانین واپس لینے تک احتجاج جاری رہے گا: کسان تنظیم

file photo

نئی دہلی: کسانوں نے مرکزکی جانب سے زرعی قوانین واپس لینے کے اعلان کے بعد بھی اپنا احتجاج جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے۔
بھارتیہ کسان یونین کے ترجمان راکیش ٹکیت نے کہا ہے کہ کسانوں کا احتجاج فوری طور پرختم نہیں ہو گا۔ انہوں نے اپنے ٹویٹرپیغام میں کہا کہ احتجاج فوری طور پر واپس نہیں لیا جائے گا ہم اس دن کا انتظار کریں گے جب پارلیمنٹ میں زرعی قوانین کو منسوخ کر دیا جائے گا اور حکومت ایم ایس پی کے ساتھ ساتھ کسانوں کے دیگر مسائل پر بھی بات کرے۔ واضح رہے کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے جمعہ کو قوم سے اپنے خطاب میں زراعت کے تینوں متنازعہ قوانین کو منسوخ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

متعلقہ خبریں

Back to top button