راشٹریہ اپادھیائے پنڈت پریشد، ایس ایل ٹی اے کی جانب سے ایم ایل سی انتخابات میں ٹی آر ایس کی حمایت کا اعلان

 

*راشٹریہ اپادھیائے پنڈت پریشد، ایس ایل ٹی اے کی جانب سے ایم ایل سی انتخابات میں ٹی آر ایس کی حمایت کا اعلان*

*یونین نمائندوں کی رکن کونسل کویتا سے ملاقات۔ تائیدی مکتوب حوالہ*

حیدرآباد۔ 5؍ مارچ ( پریس ریلیز)راشٹریہ اپادھیائے پنڈت پریشد اور ایس ایل ٹی اے یونین کے نمائندوں نے آج رکن قانون ساز کونسل کلواکنٹلہ کویتا سے حیدرآباد میں ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کرتے ہوئے گریجویٹ ایم ایل سی انتخابات میں ٹی آر ایس امیدواروں کی حمایت کا اعلان کیا اور اس ضمن میں رکن کونسل کو ایک تائیدی مکتوب بھی حوالہ کیا۔ تقریباً 50 افراد پر مشتمل اس وفد نے رکن کونسل کو ایک میمورنڈم پیش کرتے ہوئے ان کو درپیش مسائل اور افکارات سے واقف کروایا اور ان کی عاجلانہ یکسوئی کی گزارش کی جس پر رکن کونسل نے مثبت ردعمل ظاہر کیا اور یکسوئی کا تیقن دیا۔ پنڈت پریشد اور یونین کے نمائندوں نے ٹی آر ایس حکومت کی جانب سے حالیہ عرصہ میں جاری جی او 2 اور 3 کی اجرائی پر اظہار تشکر کیا اور کہا کہ وہ گریجویٹ ایم ایل سی انتخابات میں دونوں سیٹوں پر ٹی آر ایس امیدوار وانی دیوی اور پلا راجیشور ریڈی کی حمایت میں کھڑے ہوں گے۔ رکن کونسل سے ملاقات کرنے والے وفد میں راشٹریہ اپادھیائے پنڈت پریشد کے محمد عبد اللہ، جنرل سکریٹری تروملا کرانتی کرشنا، ایس ایل ٹٰی اے صدر چکرورتھولا سرینواس، جنرل سکریٹری گوری شنکر کے علاوہ دیگر شامل تھے۔ ریاست تلنگانہ میں2 ایم ایل سی نشستوں کیلئے 14 مارچ کو انتخابات منعقد شدنی ہیں جس کیلئے انتخابی کمیشن نے 16 فروری کو نوٹفکیشن جاری کیا تھا ۔ ان دونوں نشستوں کیلئے نتائج کا اعلان 17 مارچ کو ہوگا۔