ستمبر 2018 کے بعد اسمبلی وپارلیمانی انتخابات ایک ساتھ کروانے الکشن کمیشن تیار

نئی دہلی 5 اکتوبر/ الکشن کمیشن اگلے سال ستمبر کے بعد ملک میں ایک ساتھ اسمبلی اور پارلیمانی انتخابات کروانے کے لئے تیار ہے۔ یہ بات الکشن کمشنر بی پی راوت نے بتائی۔ ان کا کہنا ہے کہ اس سے قریب ایک کروڑ روپئےکا خرچ کم ہوگا۔ وہ ریاست مدھیہ پردیش کے بھوپال میں منعقدہ الکٹورل رجسٹریشن آگیسرس نیٹ ورک کی ویب سائیٹ کے افتتاح کے موقع پر خطاب کررہے تھے۔ انھوں نے بتایا کہ اس سلسلے میں الکشن کمیشن کو درکار تفصیلات سے حکومت کو واقف کروادیا گیا ہے۔ الکٹرانک ووٹنگ مشین اور اوردیگر موضوعات پر تبادلہ خیال کیا گیا ہے۔ الکشن کمشنر بے بتایا کہ ایک ساتھ انتخابات کے لئے 40 لاکھ الکٹرانک ووٹنگ مشینوں کی ضرورت ہوگی۔